Home > Uncategorized > Poem Haqq-o-Baatil by Dr. Suhela Nashtar Khairabadi

Poem Haqq-o-Baatil by Dr. Suhela Nashtar Khairabadi

نظم حق و باطل

ڈاکٹر سیّدہ سہیلا نشتر خیرابادی

جب بھی کہیں با طِل سر اُٹھاتا ہے

مر ے وُجود میں چھُپا ہوا حَق باہر آتا ہے

سِپاہی بن کر

کیوں نہ ہو اَیسا ؟

نہیں  ہےسروکار

مُجھے اُن تمام مفادات سے

شُہرت کے جھنڈوں سے

سیاست کے ہتھکنڈوں سے

دولت کے انباروں سے

ستا ئش بھرے ناروں سے
جِن کے لئے

یہ اَنا کے اَسیر

اپنی خوا ہِشوں ک غُلام

جھوٹ کے پُجاری

مکر کے سوداَگر

بربریت کے ٹھیکیدار

کرتے ہیں خون ریزیاں

اور بُھون ڈالتے ہیں

ہزاروں ہنستی کھِیلتی  مُسکراتی معصوم زندگیوں کو

صِرف اِک پل میں

اور پھِر رہ جاتے ہیں

کتنِے لوگ جیتے جی مرنے کو

کِتنی بو ڑھی آنکھیں  اند ھی ہوکر رونے کو

کِتنی جوان لڑ کیاں  پا گل ہو کر پھِرنے کو

کِتنی بیوایئں ما نگ میں خاک بھر نے کو

کِتنے ننھے بچّے فُٹ پاتھوں پر کوڑا بن کر  سڑنے کو

ظُلمتوں کے اِس گھٹا ٹوپ اندھیرے میں

اپنی آنکھوں میں ایک خوش حال دُنیا کا خُواب سجائے

اپنے دِل میں ایک پُر امن صُبح نو کی آرزو لئے

مرے اندر کا اِنسان سامنے آتا ہے

حق کی مشعل لے کر

مشعل  جو ایک نور ہے ایک روشنی ہے

مشعل جو ایک تنویر ہے ایک تدبیر ہے

مشعل جو ایک تر غیب ہے ایک تِحریک ہے

مشعل  جو اندھیروں کی قاتِل ہے اور اُجالوں کی حامِل ہے

مشعل جو بھٹکے ہوئے گُمراہ لوگوں کے/

/مُردہ ضمیروں کو جھنجوڑتی ہے

اور خونی راستوں کے رُخ اَمن کی  راہوں کی جا نِب موڑتی ہے

مشعل جو رنگوں، نسلوں،طبقوں اور مُلکوں کی آہنی دیواروں کو تو ڑتی ہے

اور نسِل  اِنسانی کا رشتہ حضرتِ آدم سے جوڑتی ہے

راہِ حق کا مُسافِر ہمیشہ بے خوف ہوتا ہے

تو پھِر کیوں ڈروں میں؟

حد سے حد یہی تو ہو گا

کوئ لہراتاہوا خنجر میرے کلیجے میں اُتار دیا جائے گا

کوئ گولی مرے دِل پر داغ دی جائے گی

یا مُجھے  زہر کا پیالہ پِلا دیا جائے گا

یا مُجھے سوُ لی  پر چڑھا دیا جائے گا

لیکِن میرے مرنے کے   بعد بھی

میرےاندرکاحق  زندہ رہیگا

اور وہ پھرکِسی اورشکل میں دُنیاکےسامنے آئےگا

کیوں     کہ حق   لافانی   ہے

…………………………………………………………………………………………

Categories: Uncategorized
  1. No comments yet.
  1. No trackbacks yet.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: